احسن العلما ء حضرت علامہ سیدشاہ مصطفیٰ حیدرحسن قادری برکاتی علیہ الرحمہ

سجادہ نشین درگاہِ برکاتیہ ،مارہرہ مطہرہ ،ہند


حضور احسن العلماء علیہ الرحمہ صاحب سجادہ مارہرہ مطہرہ ،(مرشد اجازت حضورتاج الشریعہ دام ظلہٗ علینا)ٹی وی اور ویڈیوکے عدم جواز سے متعلق حضور تاج الشریعہ حضرت علامہ مفتی محمد اختر رضا خان قادری ازہری دام ظلہٗ علینا کی تالیف ’’ٹی وی اور ویڈیوکا آپریش ُ کی تصدیق فرماتے ہوئے رقم طراز ہیں:
اس فقیر برکاتی سید مصطفیٰ حیدر حسنؔ ،سجادہ نشین درگاہِ برکاتیہ مارہر ضلع ایٹہ نے حضرت علامہ مفتی محمد اختر رضا خان صاحب برکاتی زید مجدہٗ قائم مقام حضور مفتی ٔ اعظم ہند رحمۃ اللہ علیہ (فاضل جامعہ ازہر )کا فتویٰ نافع تقویٰ ، قامع طغویٰ ،دافع بلویٰ ،زیر عنوان’’ٹی وی ویڈیوکا آپریشن‘‘ لگ بھگ بالاستیعاب دیکھا ، پڑھا اور سمجھا ۔ بحمدہٖ تعالیٰ اپنے موضوع پر وہ نہایت ہی واضح اور مفصل انداز میں لکھا گیا ہے اور فاضل مجیب سلہٗ اللہ تعالیٰ نے اس کے ہر ہر گوشہ پر دلائل شرعیہ کی روشنی میں بہترین اور عام فہم انداز میں گفتگو فرمائی ہے۔ مکابرہ اور مجادلہ ، سخن پروری اور ہٹ دھرمی جیسی لایعنی چیزوں کو پرے ڈال کر پورے خلوص کے ساتھ احقاق حق و ابطال باطل کی سعیٔ بلیغ کی گئی ہے ۔مسئلہ کی پورے طور پر تحقیق فرمائی گئی ہے لہذا اگر میں یہ کہہ دوں کہ زیر نظر فتویٰ اپنے موضوع پر حرف آخر ہے تو یہ بات میرے نزدیک مبالغہ یا شاعری ، بے جا حمایت اور طرف داری نہیں بلکہ حقیقت واقعی کا کھلےدل سے اعتراف ہوگا ۔ اللہ عزّوجل مجیب موصوف زیدہ مجدہ کو اس کوشش و کاوش پر دارین میں بہترین جزا عطا فرمائے اور ہم سب کو اس مبارک فتویٰ پر سچے دل سے عمل کرنے کی توفیق خیر فرمائے۔

بجاہ الحبیب الامین علیہ الصلوٰۃ والسلام وعلیٰ آلہٖ واصحابہ وعلینا معہم

یہ فقیر ناکارہ فتوائے مبارکہ مذکورہ سے بحمدہٖ تعالیٰ حرفاً حرفاً متفق ہے اور فاضل مجیب سلمہٗ کے حق میں صمیم قلب سے دعا ہائے عفو و عافیت دارین کرتا ہوا رخصت ہوتا ہے ۔

(مطبوعہ :ٹی وی اور ویڈیو کا آپریشن ،صفحہ :۸۹،مطبوعہ : آل انڈیا جماعت رضائے مصطفیٰ ،مہاراشٹر)

Menu
error: Content is protected !!