امام علم و فن حضرت علامہ خواجہ مظفر حسین رضوی رحمہ اللہ

’’المعتقد المنتقد ‘‘ کے اردوترجمہ سے متعلق اپنے تاثرات تحریر کرتے ہوئے یوں رقم طراز ہیں:
’’میں نے اس مترجم کتاب کا بغرض استفادہ مطالعہ کیا ہے۔ الٰہیات اور نبوات کی بحث بغور پڑھی ہے ۔ صفات باری تعالیٰ کے تعلق سے اس کتاب میں ایسی سیر حاصل بحث کی گئی ہے کہ دوسری کتابوں میں ایسی مدلل اور تفصیلی بحث بہت کم ملتی ہے ۔ حضرت تاج الشریعہ نےان اہم مباحث کا سلیس اردو زبان میں ایسا برجستہ ترجمہ فرمادیا ہے کہ ترجمہ ہی سے مفہوم واضح ہوجاتاہے۔ اس کے باوجود جابجا پیچیدہ مسائل کی ایسی عقدہ کشائی کی ہے کہ بے اختیار زبان سے نکل پڑتا ہے کہ یہ اعلیٰ حضرت اور مفتیٔ اعظم کے فیض سے تاج الشریعہ کا خاصہ ہے۔

(المعتقد المنتقعد مع المستند المعتمد(مترجم)؍صفحہ :۴۸؍مطبوعہ :المجمع الرضوی ،بریلی شریف)

Menu
error: Content is protected !!